موٹر وے کیس کا ڈراپ سین ہونے کے قریب پنجاب حکومت نے بڑا اعلا ن کردیا

موٹر وے کیس کا ڈراپ سین ہونے کے قریب پنجاب حکومت نے بڑا اعلا ن کردیا

وزیر اطلاعات پنجاب فیاض الحسن چوہان نے دعویٰ کیا ہے کہ چند گھنٹوں میں موٹر وے کیس منطقی انجام تک پہنچا دیں گے۔ موٹر وے کیس کے حوالے سے ایک ویڈیو بیان میں فیاض چوہان نے کہا ہے کہ درندہ صفت انسان کو گرفتار کر لیا جائے گا، امید ہے چند گھنٹوںمیں موٹر وے کیس منطقی انجام کو پہنچا دیں گے۔ موٹر وے کیس کی پیش رفت کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ میڈیا وزیر اعلیٰ سیکرٹریٹ، وزیر اعلیٰ پنجاب، وزیر اطلاعات اور وزیر قانون سے معلومات حاصل کریں۔ان کا کہنا تھا کہ میڈیا کےذریعے عوام کو تازہ ترین صورتحال سے آگاہ کریں گے۔

پاکستان مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما رانا ثنااللہ کا کہنا ہے کہ سانحہ موٹروے کے ملزمان کو شک کا فائدہ دے کر رہا کرنے کے امکانات پیدا کر دئیے گئے۔تفصیلات کے مطابق سابق وزیر قانون پنجاب رانا ثنا اللہ نے عدالت پیشی کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہپوری قوم موٹروے واقعے پر افسردہ ہے اور کسی بھی واقعے میں ملزمان کو شک کا فائدہ دے کر رہا کرنا ظلم ہے۔جب کہ موٹروے واقعے میں ملزمان کو شک کا فائدہ دے کر رہا کرنے کے امکانات پیدا کر دیے گئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ

ملک میں کیا ہو رہا ہے؟ قانون کی عملداری نہیں ہے۔مقدمے میں وقوعہ کو 4 بجے کا بنا رہے ہیں اور موٹروے واقعے سے متعلق ڈولفن اہلکاروں کا بیان بھی آ گیا ہے۔لیکن حکومت کی پالیسی کہاں ہے؟۔رانا ثنا اللہ کا مزید کہنا ہے کہ حکومت کو جس کام پر توجہ دینی چاہئیے وہ نظر انداز ہے،سی سی پی او غیر مناسب گفتگو کرنے کے عادی ہیں جب کہ حکومت نے انکوائری کروانے کی بجائے آئی جی ہی تبدیل کر دیا۔انہوں نے کہا کہ سی سی پی او کی وہ گفتگو جس کی پوری قوم مخالفت کر رہی ہے۔سی سی پی او کو بلدیاتی انتخابات جیتنے کے لیے لگایا گیا ہے۔ یہاں موٹروے واقعے میں حکومت اور پولیس کا اپنا ریکارڈ آپس میں نہیں ملتا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں